Wed. Nov 20th, 2019

scifi.pk

Urdu Science & Technology

نیلے رنگ میں چمکتے کیڑے

1 min read

برازیل کے محققین نے کیروپلاٹائیڈ (keroplatidae) خاندان سے کیڑوں کی ایک نئی نسل دریافت کی ہے ، جس کے لاروا سے نیلی روشنی خارج ہوتی ہے۔ اروائن ہیلتھ فاونڈیشن کیفورنیا(Irvine Health Foundation)نے اپنی ویب سائیٹ ihf.org پراس تحریر کو سائبرٹک رِکِس Cyberticic Rickis) (نامی ایک جریدے میں شائع ہونے والی ایک پوسٹ کا حوالہ دیتے ہوئےلکھا ہے۔
“ننھے دو پروں والے طفیلی مچھروں کا جوڑا (fungal mosquitoes) برازیل کی ریاست ساؤ پاؤلو کے بحر اوقیانوس کے گھنےبرساتی جنگل میں بستےہیں۔سائنسدانوں نے سب سے پہلے جنوبی امریکہ، وسطی امریکہ اور نیوزی لینڈ میں پھیلے نیولیتھک ایکوزون(neolithic ecozone) میں نیلے رنگ کی حیاتیاتی روشنی (Bioluminescence) کا مشاہدہ کیا۔ BTA لکھتا ہے کہ اسی خطے میں اور بھی بہت سے طفیلی مچھروں اور کیڑوں کودیکھا گیا ہے جو سبز ، پیلی یا سرخ روشنی کو خارج کرتے ہیں”۔
نئی قسم کے جاندار کی اس نسل کو نیوسروپلاٹس بوناریینسس (neoceroplatus bonariensis) کہا جاتا ہے۔ سائنسدانوں کو یہ لاروے اتفاقی طور پر اس وقت ملے جب وہ حیاتیاتی روشنی پیدا کرنے والے مشرومز (Mushrooms) کو اکٹھا کر رہے تھے اور انہیں پتہ چلا کہ وہ غیر معمولی نیلی روشنی خارج کر رہے ہیں۔ساؤ پاؤلو یونیورسٹی(University of São Paulo) کے انسٹی ٹیوٹ کیمسٹری (Institute of Chemistry)کے کیسیوس اسٹیوانی (Cassius Stevani)جو کہ اس تحقیق کے مصنفین میں سے ایک ہیں ، وہ کہتے ہیں
“جگنو اور دیگر روشنی پیدا کرنے والے مشرومز (Mushrooms) اس قسم کی نیلی روشنی پیدا نہیں کرتے اسی لیئے یہ یقینا ایک نئی قسم ہے”۔
زیادہ باریک بینی سے مشاہدہ کرنے پر ماہرین نے اس خاص قسم کے جاندار کی دریافت کی ہے۔نیوسروپلاٹس بوناریینسس (Neoceroplatus Bonariensis) کے

لاروے درختوں کے تنوں میں رہتے ہیں۔ اس کے جسم کے تین حصے ایسےہیں جن سے نیلی روشنی خارج ہوتی ہے ، ایک دم پر اور دو آنکھوں کے قریب۔ ابھی تک ، نیلے رنگ کی روشنی خارج کرنے والے یہ جاندار (Neoceroplatus Bonariensis)صرف شمالی امریکہ ، نیوزی لینڈ اور ایشیاء میں ہی دیکھے گئے ہیں۔

Copyright © All rights reserved. | Newsphere by AF themes.